بھارت نے واہگہ اور اٹاری سے پاکستان جانے والوں کیلیے خصوصی اجازت کی پابندی ختم کردی 114

بھارت نے واہگہ اور اٹاری سے پاکستان جانے والوں کیلیے خصوصی اجازت کی پابندی ختم کردی

اسپیشل اجازت کی پابندی ختم ہونے کے بعد پیر کے روز بھارتی شہریوں کا 50 رکنی وفد لاہور پہنچ گیا (فوٹو: فائل)

 لاہور: بھارت نے واہگہ اور اٹاری بارڈر کے راستے سفر کرنے والے مسافروں کے لیے بھارتی وزارت داخلہ سے اسپیشل اجازت لینے کی پابندی ختم کردی۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق مارچ 2020ء میں پاکستان اور بھارت نے کورونا وبا کی وجہ سے واہگہ/اٹاری بارڈ مسافروں کی آمدورفت کے لیے بند کردیا تھا تاہم کورونا کی صورتحال بہتر ہونے کے بعد پاکستان نے 17 اگست 2021ء کو اپنی طرف سے بارڈر کھول دیا تھا لیکن بھارت کی طرف سے ابھی تک بارڈربند تھا جسے پیر کے روز کھول دیا گیا ہے۔

بھارت کی طرف سے واہگہ/اٹاری بارڈر کے راستے پاکستان آنے کے لیے اسپیشل اجازت کی پابندی ختم ہونے کے بعد پیر کے روز بھارتی شہریوں کا 50 رکنی وفد لاہور پہنچا ہے۔

سردار دیپک منموہن سنگھ کی سربراہی میں آنے والے بھارتی وفد میں پنجابی ادیب، دانشور، شاعر اور سول سوسائٹی کے نمائندے شامل ہیں۔ وفد لاہور میں ورلڈ پنجابی کانگریس کے زیر اہتمام پانچ روزہ انٹرنیشنل پیس اینڈ لٹریچر کانفرنس میں شریک ہوگا۔

بھارت کی طرف سے اسپیشل اجازت کی پابندی ختم ہونے کے بعد واہگہ بارڈر کے راستے مسافروں کی آمد و رفت میں اضافے کا امکان ہے۔ 75 سال بعد اپنے بڑے بھائی سے ملنے والے حبیب عرف سکا خان بھی اب واہگہ کے راستے پاکستان آسکیں گے۔

حبیب عرف سکا خان کو پاکستانی ہائی کمیشن نے گزشتہ ماہ ویزا جاری کیا تھا تاہم اسے پاکستان اپنے بڑے بھائی محمد صدیق اور خاندان کے پاس آنے کے لیے بھارت کی وزارت داخلہ کی طرف سے اسپیشل اجازت کا انتظار تھا۔





Source link

sobaan saeed
Author: sobaan saeed

Sobaan saeed is writer||Blogger||works at khabraindaily

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں