بابر اعظم کا ایشیاء کپ کے اسکواڈ میں تبدیلی سے متعلق دو ٹوک موقف 39

بابر اعظم کا ایشیاء کپ کے اسکواڈ میں تبدیلی سے متعلق دو ٹوک موقف

قومی کرکٹ ٹیم کے کپتان بابر اعظم نے   ایشیاء کپ کے اسکواڈ میں تبدیلی سے متعلق  اپنا دو ٹوک موقف بیان کردیا۔

لاہور میں پریس کانفرنس  کرتے ہوئے  کپتان قومی کرکٹ ٹیم کا کہنا تھا کہ  ٹیم کا اعلان  مشاورت سے ہوا ہے ،  اب وقت نہیں ہے  کہ اس میں کوئی تبدیلی جائے،یہی بیسٹ الیون ہے۔

بابر اعظم نے کہا کہ  ینگ اور تجربہ کار پلئیرز پر مشتمل اسکواڈ کا اعلان کیا گیا ہے۔ شعیب  ملک اور  محمد حفیظ کے بغیر ہمیں زیادہ فوکس ہونا ہوگا، امید ہے  کہ آصف علی،خوشدل شاہ  اور افتخار  احمد ان کی کمی پوری کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ  شاہین کا تھوڑا فٹنس کا مسئلہ ہے لیکن ان کی دیکھ بال  کے لیے انہیں دورہ نیدرلینڈز پر ساتھ لے کر جا رہے ہیں۔ کوشش ہے کہ ایشیاء کپ  کے لیے شاہین مکمل فٹ ہوجائیں۔

قومی کپتان کا کہنا تھا کہ  حسن علی کو میچ ونر  ہونے کی وجہ سے سپورٹ کرتا ہوں۔ حسن علی ڈومیسٹک کرکٹ میں پرفارم کر کے واپس آئے گا۔ ہمارے تمام فاسٹ بولرز پرفارم کررہے ہیں۔

بابر اعظم نے مزید کہا کہ  عماد وسیم کا کیرئیر  ابھی ختم نہیں ہوا،ہمیں جب بھی ضرورت ہوگی ہم اسے کھلائیں گے۔

انہوں نے کہا کہ ایشیاء  کپ میں بھارت  کے خلاف میچ کا کوئی پریشر نہیں،جس طرح ٹی ٹوئنٹی ورلڈکپ  میں پرفارم کیا ویسا  ہی کرنے کی کوشش کریں گے۔

قومی کپتان نے کہا کہ  دورہ نیدر لینڈز کا کوئی خوف نہیں ہے،وہاں بھی انگلینڈ جیسا موسم ہوگا۔

بابر اعظم نے کہا  ورک لوڈ  کے لیے زیادہ فٹ ہونا پڑتا ہے۔ پاکستان کو میچ جتوانے کی کوشش کرتا ہوں ،ریکارڈ کی جانب کوئی توجہ نہیں ہوتی۔

<!––>



Source link

abdul aziz siddiqui
Author: abdul aziz siddiqui

Abdul Aziz Siddiqui Advocate ||Writer ||columnist at khabraindaily @Azizsiddiqui100 is senior lawyer and columnist from Karachi

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں