taliban statement about jalali 66

علی احمد جلالی کو قاتل اور مجرم سمجھتے ہیں۔ بطور سربراہ کو قبول نہیں۔طالبان کا دبنگ بیان

افغانستان میں عبوری حکومت کے قیام کی تیاریاں جاری ہیں۔ علی احمد جلالی کو نئی عبوری حکومت کا سربراہ مقرر کیا جائے گا۔ اقتدار کی منتقلی کے لئے صدارتی محل میں مذاکرات جاری ہیں۔

دوسری جانب طالبان نے دبنگ گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ جلالی کو قاتل اور مجرم سمجھتے ہیں بطور سرکاری سربراہ قبول نہیں کریں گے۔ دوسری جانب طالبان کی پیش قدمی میں بڑی تیزی آگئی ہے۔ وہ افغانستان کے ایک بڑے حصے پر قابض ہوگئے ہیں۔ کابل کے چاروں اطراف ان کے داخلےاور فائرنگ کی اطلاعات ہیں۔

تمام ممالک نے اپنے سفارتی عملے کو واپس بلا لیا ہے۔ افغان وزارت داخلہ نے سرکاری عمارتوں میں سے انخلا کی تصدیق کیا ہے۔ دوسری جانب سے العربیہ ٹی وی نے دعویٰ کیا ہے کہ افغان صدر اشرف غنی نے اپنے عہدے سے استعفی دے دیا ہے۔ یہ استعفی انہوں نے طالبان سے مذاکرات کے بعد دیا۔

وسیم عباس
Author: وسیم عباس

وسیم عباس فری لانسر , جرنلسٹ , وی لاگر , کالم نگار , سوشل میڈیا ایکٹویسٹ ,خبریں ڈیلی کے ساتھ بطور ایڈمن منسلک ہیں انکا ٹویٹر اکاونٹ[email protected] کے ہینڈل سے ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں