two things must remind regarding management 76

اچھی مینیجمنٹ کے لیے دو اصول یاد رکھیں؟

آج جس مفید سکل  کے بارے میں بتایا جائے گا ۔اس سکل کی صلاحیت کا تعلق نہ صرف آپ کی ذاتی زندگی سے ہےبلکہ  آپ کی پیشہ ورانہ زندگی میں بھی  اہم کردار ادا کرتی ہے ۔مایاکروس اپنی کتاب انویلیوایبل  میں صلاحیت کے بارے میں تفصیل سے بات کر چکی ہیں تو آئیے بڑھتے ہیں  ہماری آج کی سکل” خود کواور دوسروں کو مینیج کرنا سیکھیں ” ۔

مینجمنٹ وہ واحد  سکل ہے جس کا اطلاق ہماری ہر شعبہ زندگی میں  بدرجہ اتم  ہو تاہے بلکہ یہ کہنا زیادہ مناسب ہے کہ اچھی مینجمنٹ وہ صلاحیت ہے جو آپ کو  زندگی کے ہر منصب میں کامیابی دلاتی ہے بلکہ ایک پرسکون زندگی کی جانب گامزن کرتی ہے ۔پھر چاہے وہ کسی فرد کی گھریلو اور ذاتی زندگی ہو ،معاشرتی اور سماجی زندگی،یا پیشہ ورانہ زندگی،  تنظیم کا کردار انسان کی پوری زندگی کا احاطہ کیے ہوئے ہیں ۔

دوسرے لفظوں میں مینیجمنٹ منصوبہ بندی، فیصلہ سازی ،تنظیم سازی اور کسی آر گنائزیشن کے انسانی ،جسمانی اور معلوماتی مسائل کو مؤثر طریقے سے کنٹرول کرنے کا نام ہے۔مصنفہ  مایا گروس منظم رہنے کی صلاحیت کے بارے میں دو اہم پہلو کا ذکر کرتی ہیں ۔ ۔1پیشہ ورانہ اعتبار سے خود کو منظم کرنا

۔1پیشہ ورانہ اعتبار سے خود کو منظم کرنا

پہلے حصے میں مصنفہ کا کہنا ہے کہ پیشہ ورانہ زندگی میں اپنے مینیجر سے واقفیت حاصل کریں ان کے مقاصد اور ترجیحات کو سمجھیں ۔یہ اندازہ لگانے کی کوشش کریں کہ موجودہ  ماحول میں ان کی کیا ضروریات ہیں۔“مشہور کتاب  فائیو پریکٹسز گریٹ مینیجر ڈو کنسلٹنسی “کے مصنف ریمنڈ ویلر کہتے ہیں کہ جب آپ کو کوئی  اسائنمنٹ دی جائے ۔تو اسے واپس نہ کریں۔ 

بزنس اینڈ مینجمنٹ اسٹیڈیز کے جانے مانے نام ہینڈری منسبرگ کا کہنا ہے کہ مینجمنٹ سب سے بڑھ کر ایک ایسی مشق ہے ۔جہاں آرٹ، سائنس اور دستکاری ایک جگہ اکٹھے ہو جاتے ہیں۔ اس لیے ہمارا مشورہ ہے کہ آپ نے کام کے سلسلے میں بہترین خدمات کا مظاہرہ کریں۔ پیٹرٹرکر جو ایک آسٹریلین امریکن مینجمنٹ کنسلٹنٹ ہیں ۔

جو کہتے ہیں کہ  عہدے کا ملنا استحقاق یا طاقت نہیں بلکہ اس سے ذمہ داری عائد ہوتی ہے۔بحثیت ایک ذمہ دار ماتحت کے اپنی ذمہ داریوں کو احسن طریقے سے انجام دیں اور اپنے منیجر کو یہ سمجھنے میں مدد فراہم کریں کہ وہ آپ کی صلاحیتوں سے کیسے فائدہ اٹھا سکتے ہیں۔ مصنفہ کے مطابق خود کو مینیجر  کی آنکھیں اور کان بنائیں ۔اس کے علاوہ گفتگو کے فن پر مہارت حاصل کریں تاکہ اپنی بات دوسروں تک باآسانی پہنچا سکیں ۔

۔2 پیشہ ورانہ اعتبار سے دوسروں کو منظم کرنا

برعکس اس کے دوسرے مرحلے میں “مصنفہ  مایا گروس” تنظیم یعنی مینجمنٹ کی سکل کو مینیجر کے نقطہ  نظر سے بیان کرتی ہیں جیسا کہ با حیثیت ایک فرض شناس مینیجر کے یہ آپ کی اپنی اولین ترجیح  ہونی چاہیے کی آپ اپنے  ساتھیوں سے واقف ہوں ۔ان سے اچھےاور دیرینہ  تعلقات استوار  کریں تاکہ ماتحت ورکرز کی صلاحیتوں سے ان کی شخصیت کی مضبوط اور کمزور دونوں پہلو سے آگاہی حاصل کر سکیں ۔ریمنڈویلراپنی کتاب میں ایک اور جگہ بیان کرتے ہیں کہ اگر ماحول کاروبار چلنے کا باعث بنتا ہے تو وہ ماحول کیسے بنتا ہے؟

ملازمین 50 سے 70 فیصد تک کسی بھی آر گنا آئزیشن کے ماحول کا اندازہ ایک شخص کے اعمال کی مطابقت سے لگاتے ہیں اور وہ  شخص انکا مینیجر  ہے جبکہ مینیجر کنسلٹنٹ پیٹرٹرکر کہتے ہیں زیادہ تر معاملات میں اچھے بوس ہونے کا مطلب یہ ہے کہ با صلاحیت افراد کی خدمت حاصل کی جائے اور پھر ان کے راستے میں حائل نہ ہوا جائے ۔

یعنی اپنے ایمپلائز کو پرفارم کرنے کا بھرپور موقع فراہم کریں۔ “امریکن بزنس ایگزیکٹو چیک ویلج” کے بقول اگر آپ صحیح لوگوں کو چنتے ہیں اور انہیں اپنے پروں کو پھیلانے کا موقع دیتے ہیں ۔کیریئر  کی حیثیت سے معاوضے کی ادائیگی کرتے ہیں ۔تو آپ کو انہیں منظم کرنے کی ضرورت ہی نہیں ہے ۔امید کرتے ہیں کہ اس تحریر سے آپ نے بہت کچھ سیکھا ہوگا۔تحریر  کا اختتام سنڈےاڈلاجاکے سبق آموز قول سے کریں گے ۔“جو افراد اپنے آپ  کو سنبھالنے اور منظم کرنے سے انکاری ہوتے ہیں زندگی انہیں بہت سبق سکھا دیتی ہے۔”

وسیم عباس
Author: وسیم عباس

وسیم عباس فری لانسر , جرنلسٹ , وی لاگر , کالم نگار , سوشل میڈیا ایکٹویسٹ ,خبریں ڈیلی کے ساتھ بطور ایڈمن منسلک ہیں انکا ٹویٹر اکاونٹ[email protected] کے ہینڈل سے ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں