owais jam 79

ناظم جوکھیو قتل کیس: پی پی رکن سندھ اسمبلی نے گرفتاری دے دی

کراچی: ناظم جوکھیو قتل کیس میں لواحقین کا احتجاج رنگ لے آیا، کیس میں نامزد پی پی رکن سندھ اسمبلی جام اویس نے گرفتاری دے دی ۔

تفصیلات کے مطابق ایس ایس پی ملیر نے میڈیا سے گفتگو میں تصدیق کی کہ ناظم جوکھیو قتل کیس میں پی پی رکن سندھ اسمبلی جام اویس نے گرفتاری دیدی ہے۔

جام اویس نے ملیر میمن گوٹھ پولیس اسٹیشن میں جاکر خود کو گرفتاری کے لئے پیش کیا۔

گزشتہ روز بلاول بھٹو زرداری نے بھی مقتول کے لواحقین سے رابطہ کیا تھا، اس سے قبل صوبائی وزیر سعید غنی اورامتیاز شیخ نے بھی لواحقین سے ملاقات کی تھی، صوبائی وزرا کی جانب سے مقتول کے لواحقین نے یقین دہانی پر احتجاج 24گھنٹے کیلئے موخر کردیا تھا۔

نوجوان ناظم جوکھیو کے قتل کے خلاف لواحقین نے گھگھر پھاٹک کے قریب دھرنا دیا تھا، دھرنے کے باعث نیشنل ہائی وے ٹریفک کے لئے مکمل طور پر بند ہوگیا تھا۔

نوجوان ناظم جوکھیو کے قتل کے خلاف لواحقین نے گھگھر پھاٹک کے قریب دھرنا دیا تھا، دھرنے کے باعث نیشنل ہائی وے ٹریفک کے لئے مکمل طور پر بند ہوگیا تھا۔

اس سے قبل ناظم جوکھیو کے قتل کے واقعے میں ملوث دو افراد کو گزشتہ رات حراست میں لیا گیا تھا، ایس ایس پی ملیر کا کہنا تھا کہ حراست میں لیے گئے دونوں افراد جام اویس کے گن مین ہیں، تاہم وہ مقدمے میں نامزد نہیں ہیں۔

وسیم عباس
Author: وسیم عباس

وسیم عباس فری لانسر , جرنلسٹ , وی لاگر , کالم نگار , سوشل میڈیا ایکٹویسٹ ,خبریں ڈیلی کے ساتھ بطور ایڈمن منسلک ہیں انکا ٹویٹر اکاونٹ[email protected] کے ہینڈل سے ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں