67

حکومت نے شہباز شریف کی بیرون ملک روانگی کے خلاف اپیل واپس لے لی

حکومت اور شہباز شریف میں معاملات طے۔حکومت نے شہباز شریف کی بیرون ملک روانگی کے خلاف اپیل واپس لے لی۔ شہباز شریف کی سپریم کورٹ کو توہین عدالت کی درخواست کی پیروی نہ کرنے کی یقین دہانی۔ عدالت نے اپیل واپس لینے پر درخواست نمٹا دی۔

قرار دیا گیا کہ جس انداز سے شہباز شریف کو ریلیف دیا گیا وہ کسی کے لیے مثال نہیں بن سکتا۔ اس معاملہ پر جسٹس اعجازالاحسن نے ریمارکس دیئے کہ حکومتی ہدایات لینے کے لیے حکومتی وکیل کو صرف تیس منٹ دیے گئے۔ بتایا جائے کتنے مقدمات میں یکطرفہ ریلیف دیا گیا۔ اٹارنی جنرل نے کہا جس طرح جج کو وقت سے پہلے ہٹایا گیا اس پر حکومت کو اعتراض ہے جس پر رجسٹرار لاہور ہائی کورٹ نے کہا کہ نئے ججزکی تعیناتی کے لیے نام بھجوا دیئے گئے۔

وفاقی حکومت نے شہباز شریف کے بیرون ملک جانے اور بلیک لسٹ میں نام ڈالے جانے کی درخواست واپس لے لی۔ شہباز شریف اور حکومت کے درمیان معاملات کھلی عدالت میں پائے۔ اس حوالے سے عدالت کا کہنا تھا کہ شہباز شریف کا کیس کسی سسٹم کے تحت مقرر ہوا یا خاص طور پر سماعت ہوئی؟

رجسٹرار لاہور ہائی کورٹ نے بتایا کہ درخواست عتراض کے لیے لگی تھی جو میں کو ساڑھے نو بجے درخواست پر اعتراض لگا اور ساڑھے گیارہ بجے اس پر سماعت ہوئی جسٹس اعجازالاحسن نے استفسار کیا کہ حکومتی وکیل کو ہدایات کے لیے صرف تیس منٹ دیے گئے؟ ایک سال میں کتنے مقدمات کی سماعت جمعہ کو بارہ بجے ہوئی؟

ہائی کورٹ نے یہ بھی نہیں پوچھا کہ شہباز شریف کا نام کس لسٹ میں ہے؟ کیا اس طرح کا عمومی حکم جاری ہو سکتا ہے جیسا کہ لاہور ہائیکورٹ نے کیا؟ حکومت کی جانب سے اپیل واپس لینے پر عدالت عظمیٰ نے درخواست نمٹا دی

https://www.youtube.com/watch?v=MPuWfSsrZvk
وسیم عباس
Author: وسیم عباس

وسیم عباس فری لانسر , جرنلسٹ , وی لاگر , کالم نگار , سوشل میڈیا ایکٹویسٹ ,خبریں ڈیلی کے ساتھ بطور ایڈمن منسلک ہیں انکا ٹویٹر اکاونٹ[email protected] کے ہینڈل سے ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں