afghan taliban 90

شمالی افغان شہروں کے2 اہم علاقے جھڑپوں کے دوران طالبان کے قبضے میں۔

کابل(افغانستان)، 8 اگست: افغان میڈیا کے مطابق سر پل شہر کے وسطی حصے اور قندوز شہر کے کئی علاقے شدیدجھڑپو  کے بعد طالبان کے قبضے میں آگئے ہیں۔

ٹولو رپورٹ کے مطابق پتہ چلتا ہے کہ سر پل میں گورنر کمپاؤنڈ ، پولیس ہیڈ کوارٹر اور این ڈی ایس آفس طالبان کے قبضے میں آگئے ہیں۔

مقامی عہدیداروں کے مطابق حکومتی سکیورٹی فورسز سر پل میں ایک فوجی اڈے اور سر پل کے ضلع بلخ میں نیز قندوز کے دو علاقوں میں تعینات ہیں۔ دیگر علاقے طالبان کے قبضے میں آچُکے ہیں۔

جوزجان کے صوبائی دارالحکومت شبرغان پر طالبان کے قبضے کے بعد گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ان دو شمالی شہروں پر طالبان کے حملوں میں شدت آئی ہے۔

سر پل کے رہائشیوں کا کہنا ہے کہ، “صرف صوبہ سر پل کا کُچھ حصہ اور  ضلع بلخ میں ایک افغانی رجمنٹ کے پاس ہے۔”

مرکزی اور مقامی حکومتوں نے اس کاروائی پر کوئی خاص توجہ نہیں دی۔ کابل میں سر پل رہائشی کونسل کے سربراہ یار محمد میہان پراسٹ نے کہا کہ سیکورٹی فورسز کے پاس محاصرہ کے دوران کھانا بھی نہیں تھا۔

وسیم عباس
Author: وسیم عباس

وسیم عباس فری لانسر , جرنلسٹ , وی لاگر , کالم نگار , سوشل میڈیا ایکٹویسٹ ,خبریں ڈیلی کے ساتھ بطور ایڈمن منسلک ہیں انکا ٹویٹر اکاونٹ[email protected] کے ہینڈل سے ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں